محکمہ لائیو سٹاک شعبہ تویع کے زیراہتمام اور این آر ایس پی کوٹلی کے تعاون سے ’’ملین برڈز پروگرام ‘‘ کا شاندار آغاز۔

کھوئی رٹہ(نمائندہ اپنا پوٹھوار ٹی وی غلام محمود جرال)
محکمہ لائیو سٹاک شعبہ تویع کے زیراہتمام اور این آر ایس پی کوٹلی کے تعاون سے ’’ملین برڈز پروگرام ‘‘ کا شاندار آغاز،ابتدائی مرحلے میں یونین کونسل بڑالی کے دو دیہی مضافات ڈنہ اور منیل کے مقام پر ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا، ورکشاپ میں بالخصوص دیہی خواتین نے گھریلو سطح پر مرغبانی پالنے کی طرف راغب کرنے کا احسن اقدام کیا گیا، ملین برڈز پروگرام میں خواتین کی کثیرتعداد میں شرکت اور دلچسپی کی وجہ سے کامیابی سے جاری ہے۔ ، تربیتی ورکشاپ سے ڈسٹرکٹ لائیو سٹاک اینڈ پولٹری ڈویلپمنٹ آفیسر ڈاکٹر فریداحمد خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ محدود وسائل کے باوجود لائیوسٹاک پولٹری سیکٹر کی ترقی اور کسانوں کی مالی حالت بہتر بنانے کیئے منظم انداز میں کوشاں ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس ملین برڈز پروگرام کا مقصد دیہی علاقوں میں خواتین کو مرغبانی کی طرف راغب کرنے اور مرغبانی کے فوائد اس کی اہمیت اجاگر کرنا بنیادی مقصد ہے تاکہ دیہی خواتین مرغبانی کی طرف دوبارہ راغب ہو کر گھریلو سطح پر مرغیاں پال کر اپنی غربت ختم کرنے میں ممدومعاون ثابت ہو سکتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ مرغیوں کو علاج اور ہر تین ماہ بعد رانی کھیت ویکسیئن کروا کر نقصان سے بچا یا جا سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ دیہی علاقوں میں پولٹری سیکٹر کو وسعت دینے کے لیے ہرممکن کوشش کریں گے۔ ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے این آر آر ایس پی کے ڈسٹرکٹ انچارج سوشل موبائلزیشن علی اختر نے کہا کہ کمیونٹی کی فلاح و بہبود کیلئے این آر ایس پی بھرپور کردار ادا کرتی رہے گی۔ عوامی مفاد کو مدنظر رکھتے ہوئے این آر ایس پی ملین برڈز ویکسیئنیشن پروگرام کیلئے اپنی تمام تر توانائیاں صرف کرے گی اور عوام کو ان کی دہلیز پر سہولیات بہم پہنچانے کیلئے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہیں کرے گی۔ تربیتی ورکشاپ کے چیف کوآرڈینیٹر ویٹرنری آفیسر توسیع ڈاکٹر حمزہ عزیز نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دیہی آبادی کا انحصار لائیوسٹاک پر ہے۔ یہ سیکٹر ملکی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے خواتین حقیقی معنوں میں صلاحیتوں کو بروئے کار لا کر ملک و قوم کی ترقی میں اہم کردار ادا کر سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملین برڈز ویکسینئیشن پروگرام میں خواتین کی شرکت نے ثابت کر دیا ہے کہ خواتین باشعور ہیں اس پروگرام کا بنیادی مقصد ہی دیہی علاقو ں میں شعور اجاگر کرنا ہے تاکہ لوگ اردگرد کے ماحول پر گہری نظر رکھیں اور بہترین فوائد حاصل کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ اپنے پرندوں کو محکمہ لائیوسٹاک کے اہلکاران سے فوراً رابطہ کر کے علاج کروائیں اور ساتھ ویکسیئن بھی کروائیں تاکہ اپنے قیمتی نقصان سے بچا جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ لائیو سٹاک ملکی ترقی کے عین مطابق جدید سائنسی خطوط پر اپنا کلیدی کردار ادا کر رہا ہے پرانے وقتوں میں لوگ گھروں میں مرغیاں پال کر بہترین گزربسر کرتے تھے ملکی معیشت کی بہتری اور غربت کے خاتمے کیلئے اب بھی مرغبانی کی طرف توجہ دینا اشد ضروری ہیناصرف اس کو منافع بخش کاروبار بنایا جا سکتا ہے بلکہ اپنی آمدن میں اضافہ بھی کیا جا سکتا ہے اور ساتھ ساتھ ملکی معیشت میں بھی بہتری آ سکتی ہے اور سب سے بڑھ کر انڈوں اور گوشت کی قلت بھی دور ہو گی اور سستی چیزیں بآسانی میسر آ سکیں گی۔بعد ازاں ملین برڈز ویکسینیشن پروگرام کے تحت ڈنہ منیل میں موقع پر لوگوں کے گھریلو مرغیو ں میں رانی کھیت ویکسین کی گئی اور خواتین و حضرات میں مفت ادویات بھی تقسیم کی گئیں۔ملین برڈز پروگرام میں لوکل سوشل آرگنائزر کے صدر محمد ضمیر، محمد خالد، مسعود بٹ، این آر ایس پی کے ڈسٹرکٹ انچارج علی اختر و دیگر نے شبانہ روز محنت کر کے ملین برڈز پروگرام کی کامیابی میں اہم کردار ادا کیاان کی کاوشوں سے یہ پروگرام عید کے بعد ضلعی سطح پر دوسرا مرحلہ شروع کیا جائے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Facebook

Get the Facebook Likebox Slider Pro for WordPress